User Rating:  / 3
PoorBest 

 

مولوی حبیب الرحمن صدیقی کاندھلوی دیوبندی   نواسہء رسول ﷺحضرت حسن رضی اللہ کی صحابیت کا انکار کرتے ہوئے بڑی  بے باکی سے لکھتا ہے:

"۔" نہ آپ حضرت فاطمہ رضی اللہ عنہا کی پہلی اولاد  ہیں اور نہ اصولی طور پر آپ کو شرفِ صحابیت حاصل  ہے۔

کاندھلوی دیوبندی نے  نہ صرف حضرت حسن کی صحابیت کا انکار کیا بلکہ  اسی بے شرمی کے ساتھ  حضرت حسین رضی اللہ عنہ  کی صحابیت کا بھی انکار کرتے ہوئے لکھا: ان امور خود بخود یہ بات ثابت ہو جاتی ہے کہ حضرت حسن صحابی نہ تھے  کجا حضرت حسین کی صحابیت۔(مذہبی داستانیں اور ان کی حقیقت ص ۔ ۲۸۷)

اہلحدیث کو چھوٹا رافضی کہنے والے خود بڑے رافضی اور ناصبی بھی  ہیں کہ جنت کے جوانوں کے سردار  کی صحابیت کا ہی انکار کر دیا۔ اہلسنت کے نزدیک حضرت حسین و حسین رضی اللہ عنھمبالاتفاق صحابی ہیں اور اس میں کوئی شک و شبہ نہیں۔

scroll back to top